Friday, June 21, 2024
Top Newsٹیسلانے آٹو پائلٹ ڈرائیورکی وجہ سے ہونے والی ہلاکت کا مقدمہ جیت...

ٹیسلانے آٹو پائلٹ ڈرائیورکی وجہ سے ہونے والی ہلاکت کا مقدمہ جیت لیا

امریکی کارساز کمپنی ٹیسلا نے آٹو پائلٹ ڈرائیورکی وجہ سے ہونے والی ہلاکت کا مقدمہ جیت لیا

اردو انٹرنیشنل (مانیٹرنگ ڈیسک)ٹیسلا کو منگل کے روز ایک عدالت نے 2019 کے مہلک ماڈل 3 حادثے میں کلیئر کر دیا تھا جو “لاس اینجلس” امریکہ میں پیش آیا تھا، جس میں ڈرائیور کی معاونت کا جدید نظام، آٹو پائلٹ شامل تھا۔ یہ مقدمہ دو مسافروں کی طرف سے دائر کیا گیا تھا جنہوں نے کمپنی پر الزام لگایا تھا کہ گاڑی فروخت کرتے وقت آٹو پائلٹ کو یہ معلوم تھا کہ وہ خراب تھی۔

دوسری جانب ٹیسلا نے دلیل دی کہ حادثے کی وجہ انسانی غلطی تھی۔ عدالت نے یہ بھی پایا کہ گاڑی میں مینوفیکچرنگ خرابی نہیں تھی۔ اب ٹیسلا کے سربراہ ایلون مسک نے بھی اس خبر پر رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے اس یقین کا اظہار کیا کہ اگر آٹو پائلٹ کو چالو کیا جاتا تو ممکنہ طور پر ڈرائیور بچ جاتا۔

مسٹر مسک نے X (پہلے ٹویٹر) پر لکھا ، “ستم ظریفی یہ ہے کہ اگر یہاں آٹو پائلٹ کو آن کیا جاتا تو یہ یقینی طور پر ڈرائیور کو بچا سکتا تھا۔

اردو انٹرنیشنل

Micah Le” ” دو ہزار انیس (2019)میں اس وقت ہلاک ہو گیا تھا جب ان کا ماڈل 3 ہائی وے سے ہٹ گیا. درخت سے ٹکرایا اور آگ لگ گئی۔ اس واقعے میں مسٹر لی ہلاک جبکہ ان کے دو مسافر زخمی ہو گئے تھے۔ اس کے بعد دونوں مسافروں نے عدالت سے رجوع کیا اور الزام لگایا کہ آٹو پائلٹ نے حادثہ پیش کیا اور 400 ملین ڈالر سے زائد کے ہرجانے کا مطالبہ کیا۔ یہ مقدمہ ریاستہائے متحدہ میں پہلا تھا جس میں الزام لگایا گیا تھا کہ ٹیسلا کی آٹو پائلٹ خصوصیت موت کا باعث بنی۔

تاہم، ٹیسلا نے اس الزام سے انکار کیا کہ مسٹر لی نے شراب نوشی کی تھی اور یہ واضح نہیں تھا کہ حادثے کے دوران آٹو پائلٹ مصروف تھا یا نہیں۔ ریور سائیڈ کاؤنٹی سپیریئر کورٹ میں جیوری نے بھی مسٹر مسک کی کمپنی کے حق میں ووٹ دیا اور کہا کہ گاڑی میں مینوفیکچرنگ کی خرابی نہیں تھی۔

دیگر خبریں

Trending

India's race for cobalt will begin in disputed sea waters, China fears

متنازعہ سمندری پانیوں میں کوبالٹ کی ہندوستانی دوڑ شروع ہو جائے...

0
متنازعہ سمندری پانیوں میں کوبالٹ کی ہندوستانی دوڑ شروع ہو جائے گی،چین کو خدشہ اردو انٹرنیشنل‌(مانیٹرنگ ڈیسک) عالمی‌خبر رساں ادارے "الجزیرہ " کے مطابق ...